Community News

 

کویت کے جنوبی صحرا کے ایک کشادہ احاطہ مخیم الربعیی ميں ایک منظم ، پروقار رنگا رنگ دلچسپیوں سے مزین پکنک کا انعقاد کیا گیا جس میں پاکستانی خواتین و حضرات و بچوں کی ایک کثیر تعداد نے شرکت کی خواتین اور حضرات کےالگ الگ بڑے خيموں کے علاوہ اور بہت سارے چھوٹےخيمے بهی اطراف میں پھیلے ہوئے تهے۔جن میں دن بھر انڈور سرگرمیاں جاری و ساری رہیں جبکہ میدانی سرگرمیوں میں
مختلف کهيلوں کے مقابلے کرائے گئے جن میں کرکٹ, فٹبال, والی بال, رسہ کشی,کبڈی, دوڑیں اور دیگر مختلف کھیلوں کے ذريعے نوجوانوں اور بچوں کو تفريح کا موقع ملا جس کو وہاں پر موجود حاضرین نے بے حد سراہا
فيمليز کو ان سرگرميوں کے ذريعےايک آرام ده ماحول ميں لطف اندوز ہونے کا موقع بھرپور ملا۔
دوران پکنک عصر حاضرکی نایاب اسلامی کتب کےاسٹال سے بھی لوگوں نے بھرپور فائدہ اٹھایا,
جس وقت کھلے میدان میں کھیلوں کی سرگرمیاں جاری تھیں اسی دوران انڈور (علمی وادبی )سرگرمیاں جاری ساری رہیں
ایک بہت بڑے خیمہ کے اندر مشاعرے کا انعقاد کیا گیا جس میں پاکستان اور بھارت کے معروف شعراء نے حصہ لیا پروگرام میں میزبانی کے فرائض معروف شاعر صداقت علی ترمذی ادا کیئے جبکہ نظامت برائے مشاعرہ کے فرائض ریڈیو کویت اردو سروس کے عبداللہ عباسی نےسر انجام دئیے, شعراہ کرام نے مصرعہ طرحی "ہوتا ہے روز شب تماشا مرے آگے" پر اپنے اشعار کے ذریعہ لوگوں سے بے پناہ داد وصول کی
لذیذ ناشتہ کےساتھ پکنک کی سرگرمیوں کو شروع کيا گيا،اور پکنک کا باقاعدہ آغاز کويت کے معروف قاری عبدالرحمان کی انتہائی خوب آواز سے ہوا،اس کے بعد نعت رسولؐ مقبول جناب راجہ محمد حنیف نے خوبصورت آواز ميں پڑھی اسلامک ايجوکيشن کميٹی کے نائب صدرمولانا کمال صاحب نےتقوی اور فکر آخرت کے موضوع پر درس قرآن دیا ۔
پکنک ناظم نعیم ارشاد نے
دن بھر کی سرگرمیوں اور انکی تفصیلات کےبارے میں ہدایات دیں

صدف علی صدف نے کھيلوں کے شیڈول کے بارے میں تفصیلات سے آگاہ کیا
میڈیا سیل کی طرف سےالخدمت سلائیڈشو پيش کيا گيا,
شعبہ دعوت کی ٹیم نےالإيمانية الادعوية کيمپ لگایا,جہاں دن بھر مہمانوں کی بہار رہی اور
عربی قہوہ کھجور اور حلویات سے تواضع کی گئی
اسلامک ايجوکيشن کميٹی کےصدراخلاق احمد صاحب اسلام کا نظام عدل کے موضوع پر
جمعہ کا خطبہ دیا ۔ جسے لوگوں نے بہت سراہا
نماز جمعہ کے بعد لوگوں کو کھانا کھلایا گیا ۲۵۰۰ لوگوں کو کھانا فراہم کرنے میں اسلامک ایجوکیشن کمیٹی اور یوتھ ونگ کے جوانوں نے بھرپور لگن اور خلوص کا مظاہرہ کیا اور عوام نے بھی اس میں اپنے پورے تعاون کا مظاہرہ کیا,
کھانے سے فارغ ہونے کے بعد یوتھ ونگ نے یوتھ کنونشن منعقد کیا جس سے لوگ بہت زیادہ محظوظ ہوئے ,
نماز عصر کے بعد مختلف کھیلوں میں کامیابی حاصل کرنے والے کھلاڑیوں میں انعامات تقسیم کئے گئے اسلامک ايجوکيشن کميٹی کے صدر جناب اخلاق احمد صاحب نےاپنے اختتامی کلامات ميں فکړ‎آخرت پر انتہائی پُر مغز بات رکھی۔
۲۵۰۰ سے زيادہ لوگوں نے اپنی فيملی کےساتھ اس پکنک میں حصہ ليا۔

اس عظيم الشان پکنک کی صوتی و بصری کوریج اسلامک ايجوکيشن کميٹی ميڈيا ٹیم نے خوش اسلوبی سے سر انجام ديں۔

یہ ایک یاد گار دن تها جو مدتوں یاد رہے گا.

 

the event gone live on PIK

 

 

اینجلز پیرنٹس ایسوسی ایشن کے زیر اہتمام کویت میں مقیم پاکستانی اور دیگر قومیتوں (ایکسپیٹریئٹ) سے تعلق رکھنے والے خصوصی ضروریات کے حامل بچوں کے لئے رنگا رنگ سالانہ پکنک برائے خصوصی اطفال 2018 کا اہتمام کویت کے یوم البحار پارک میں بروز جمعہ المبارک 28 دسمبر 2018 میں کیا گیا۔جس میں حکومت کویت کی نمائیندگی کرتے ہوئے وکیل وزاره سیاحت جناب یوسف مصطفی عبدالله نے اپنی پوری ٹیم کے ساتھ شرکت کی اور اینجلز پیرنٹس کی حوصلہ افزائی کرتے ہوئے اس بات کا ارادہ ظاہر کیا کہ کے آئندہ بھی اس طرح کی سرگرمیوں کے لئے اینجلز پیرنٹس کا بھرپور ساتھ دینگے، سفارتخانہ پاکستان کے کمیونٹی ویلفیئر اتاشی ڈاکٹر عمر جاوید نے خصوصی طور پر پکنک میں شرکت کی۔ان کے علاوہ کمیونٹی کی دیگر سرکردہ شخصیات اور شعبہ خصوصی تعلیم اور میڈیکل نے بھی پکنک میں خوب بڑھ چڑھ کر حصہ لیا اور اپنے زریں خیالات کا اظہار کرتے ہوئے والدین اور اتظامیہ کو مبارکباد پیش کی ۔

پاکستان سے ماہر آڈیولوجسٹ ڈاکٹر سید نوشاد شوکت (کراچی) ، سٹیپ ٹو لیرن (اسلام آباد) کے ڈئریکٹر میجر عمیر بن طاہر، کنگسٹن اسکول (ایبٹ آباد) کے فاؤنڈر محمد عرفان۔ ملائشیا سے شعبہ خصوصی تعلیم کی ماہر ڈاکٹر فرحین ناز نے بذریعہ ٹیلیفون حاضرین سے تبادلہ خیال کیا ۔
بانی و صدر اینجلز پیرنٹس ایسوسی ایشن انجینئر/ سیدجنید احمد نے کہا کہ اس پکنک کا مقصد تمام والدین کو ایک پلیٹ فارم مہیا کرنا اور ایک دوسرے کے قریب لانا ہے۔ تاکہ انہیں آگاہی دی جائے کہ وہ بھی اس معاشرے کا حصہ ہیں اور کسی سے کم تر نہیں۔انھوں نے اس بات کی اہمیت پر زور دیا کہ ان بچوں کی آبیاری کے لئے اساتذہ کرام کے ساتھ والدین کو بھی متوازن محنت اور آگاہی سے کام لینا پڑیگا یہ ایک صبر آذمہ کام ہے۔ ہمت سے منزل تک رسائی ممکن ہے 
بچوں کے والدین نے بچوں کے ہمراہ مختلف گیمز میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیا اور بچوں کے ساتھ خوب ہلا گلا کیا۔
پاکستان انٹرنیشنل اسکول کی مہتمم فزیکل ایجوکیشن مسز شائستہ طاہر نے اپنی گرلز گائیڈ ٹیم کے ساتھ اینجلز، انکے بھائی / بہن اور والدین کے لئے مختلف گیمز منعقدکروائے۔ جیتنے والوں کو انعامات دیئے گئے۔ 
اینجلز پیرنٹس اینڈ سبلنگس والینٹیئرز نے گیمز ، فیس پینٹنگ، ہینڈ پینٹنگ اور دیگر امور میں بڑھ چڑھ کر اپنا پورا کردار ادا کیا 
جمعہ کی نماز کے بعد حاضرین کی تواضع پر تکلف ظہرانے سے کی گئی ،جس میں لذیز بریانی، حلیم، چکن میکرونی اور پچوں کے لئے میکڈونلڈز کڈز میل وغیرہ شامل تھی۔

پروگرام کےاختتام پر وکیل وزارہ سیاحت کی طرف سے پاکستان ایمبیسی اور اینجلز پیرنٹس ایسوسی ایشن کو یادگاری شیلڈ پیش کی گئی۔ اس موقع پر اینجلز پیرنٹس ایسوسی ایشن نے وکیل وزارہ ، ایمبسڈر اور والینٹیئرز کو شیلڈز اور سرٹیفیکیٹ دیئے۔ خصوصی بچوں

اور انکے بھائی بہنوں کو مختلف تحفے تحائف بھی انکی اپنی جگہ پر جا کر پیش کئے گئے۔

Full Album link:  https://business.facebook.com/media/set/?set=a.2030290707069234&type=1&l=b23906e3c5

Live Video Link: https://youtu.be/BCWitWBm-rc

 

 

عشائیہ میں پاکستان قرآت و نعت کونسل کویت کی جانب سے کویت میں جشن عید میلاد النبی ﷺکے سلسلہ میں حمدونعت کی پررونق محافل سجانے والی تنظیمات ، قرأء اکرام و ثناخوان رسول اوران محافل کی بھرپور کوریج کرنے والے پاکستانی میڈیا کے نمائندگان کو خصوصی طور پر مدعو کیا گیا تھا


پاکستان قرآت و نعت کونسل کویت کی جانب سے کویت میں جشن عید میلاد النبی ﷺکے سلسلہ میں حمدونعت کی پررونق محافل سجانے والی تنظیمات ، قرأء اکرام و ثناخوان رسول اوران محافل کی بھرپور کوریج کرنے والے پاکستانی میڈیا کے نمائندگان کے اعزاز میں اک پروقار عشائیہ کا اہتمام کیا گیا اس تقریب کا مقصد کویت میں تمام مذہبی و دینی تنظیمات اور ثنا خوان رسول کی حوصلہ افزائی اور مستقبل میں منظم اور بین الاقوامی طرز کی محافل حمد و نعت کے انعقاد کے لئے باہمی مشاورت اور جامع حکمت عملی کے لئے اک پلیٹ فارم پر اکھٹا کرنا تھا۔ تقریب کی صدارت جناب شھزاد احمد صدر پاکستان قرات و نعت کونسل کویت نے کی اور تقریب کے مہمان خصوصی پیر طریقت جناب صاحبزادہ الحاج پیر محمد اعظم نوشاھی قادری دامت برکاتہم عالیہ ، سجادہ نشین آستانہ عالیہ نوشاہیہ قادریہ دڑواہ شریف گجرات تھے تقریب کی نظامت صاحبزادہ عرفان اعظم کیانی نے کی
تلاوت قرآن مجید کی سعادت خافظ محمد سفیان نے حاصل کی اور مجاھد چشتی اور قاری صہیب انجم نے ہدیہ نعت پیش کیا۔ پروگرام میں پاکستان قرات و نعت کونسل کے سینئیر نائب صدر طارق علی محسن اور صدر پاکستان بزنس کونسل کویت جناب محمد عارف بٹ اور حافظ محمدشبیر ڈائریکٹر پاکستان بزنس سنٹر کویت نے اپنی تقاریر میں اس تقریب کو خوب سراہا اور اس تقریب کو کویت کی تاریخ میں دینی تنظیمات اور پاکستانی کمیونٹی کے لئے مثبت قدم قرار دیا۔ تقریب سے کویت کے معروف عالم دین جناب صاحبزادہ علامہ قاری خلیل احمد رضوی صاحب نے میلاد النبی کے متعلق بیان فرماکر حاضرین مجلس کے قلوب و اذہان کو معطر کیا اور مرحوم ملک نور محمد کی دوسری برسی پر انکی روح کے ایصال ثواب کیلئے فاتحہ خوانی بھی کروائی ،
تقریب کے آخر میں صاحبزادہ پیر محمد اعظم نوشاھی قادری دامت برکاتہم عالیہ نے رقت انگیز دعا فرماکر مجلس میں سماں باندھ دیا

 

کویت اور دنیا بھر میں مقیم پاکستانی ہم وطنوں کو بانی پاکستان بابائے قوم قائد اعظم محمد علی جناح کا 143 واں یوم ولادت مبارک ہو۔25 دسمبر 1876 کو وزیر منشن کراچی میں مشہور تاجر پونجا جناح کے ہاں ایک بچے کی ولادت ہوئی والدین نے بچے کا نام محمد علی جناح رکھا ،کسی کو علم نہیں تھا کہ یہ بچہ برصغیر کی نئی تاریخ لکھے گا قائد اعظم محمد علی جناح 1906 سے 1913 تک کانگریس میں رہے مگر انہوں نے محسوس کر لیا کہ کانگریس صرف ہندوؤں کی نمائندہ جماعت ہے تو انہوں نے مسلم لیگ میں شمولیت اختیار کرلی اور 1913 سے 1947 تک انہوں نے دن رات سخت جدوجہد کی برصغیر کے مسلمانوں کو ایک پرچم تلے جمع کیا اور 14 اگست 1947 کو مسلمانوں کیلئے ایک آزاد ریاست پاکستان حاصل کرنے میں کامیاب ہوگئے ۔ بانی پاکستان کا سب سے بڑا کارنامہ یہ ہے کہ انہوں نے مسلمانوں کو ایک شناخت دلوائی انہوں نے مسلمان ایک فرقہ نہیں ایک قوم ہیں پاکستان اسی دن بن گیا تھا جس دن برصغیر کا پہلا باشندہ مسلمان ہوا تھا۔انہوں نے انگریز سامراج اور کانگریسی لیڈروں کو تسلیم کرنے پر مجبور کیا کہ برصغیر میں ایک نہیں دو قومیں آباد ہیں۔قائد اعظم عظیم رہنما تھے جنہیں نہ تو خریدا جاسکا نہ جھکایا جاسکا۔گاندھی نے ساری دنیا کے سامنے انہیں پیش کش کی کہ پاکستان کا مطالبہ چھوڑدیں ہم آپ کو متحدہ ہندوستان کا تاحیات وزیراعظم تسلیم کرتے ہیں اتنی بڑی پیشکش ٹھکرانے والا لیڈر بجا طور پر قائد اعظم کہلانے کا حقدار ہے۔عزیز ہم وطنوں بانی پاکستان کی سالگرہ منانا بڑی خوش آئند بات ہے زندہ قومیں کبھی بھی اپنے ہیروز کو فراموش نہیں کرتیں مگر اس موقعہ پر ہمیں محسن قوم کے افکار کو بھی یاد رکھیں انہوں نے اتحاد ،ایمان اور نظم وضبط کا درس دیا۔انہوں نے آزادی کے روز ہی فرمایا تھا پاکستان بن گیا ہے اب اسے تعمیر کرنا ہے،ہم میں سے کوئی سندھی پنجابی بنگالی بلوچی یا پٹھان بن کر نہ سوچے سب پاکستانی ہیں اور پاکستان پر سب کا یکساں حق ہے۔انہوں نے فرمایا تھا کہ پاکستان کا آئین تو تیرہ سو سال پہلے بن گیا تھا پاکستان میں تمام قوانین قرآن و سنت کی روشنی میں بنائے جائیں گے۔پاکستان ایک اسلامی ریاست ہوگی جہاں اقلیتوں کو مکمل مذہبی ،معاشی اور معاشرتی آزادی حاصل ہو گی ۔کسی کے ساتھ رنگ ،نسل مذہب کی بنا پر امتیاز نہیں برتا جائے گا۔انہیں نوجوان نسل سے بڑی امیدیں وابستہ تھیں انہوں نے متعدد مواقع پر طلباء سے خطاب کرتے ہوئے فرمایا کہ طالب علموں کی اولین ترجیح تعلیم ہونی چاہیے۔انہوں نے فرمایا محنت کے علاوہ کامیابی کا کوئی راستہ نہیں ۔ان کا مشہورِ فرمان ہے کام،کام اور بس کام۔آئیے بانی پاکستان کا یوم ولادت مناتے ہوئے عہد کریں کہ بائے قوم کے فرمودات پر عمل کرتے ہوئے ملک کو عظیم سے عظیم تر بنانے کیلئے کوشاں رہیں گے۔
قائد اعظم زندہ باد
پاکستان پائندہ باد

صدر پاکستان تحریک انصاف کویت اخلاق احمد ملک اور چئیرمین پی ٹی آئی ایگزیکٹو بورڈ کویت پیر امجد حسین کی سینیٹر و وزیر برائے سائنس اینڈ ٹکنالوجی اعظم سواتی اور وزیر اعظم پاکستان کے مشیر خصوصی نعیم الحق کے ہمراہ وزیر اعظم پاکستان جناب عمران خان کے ساتھ بنی گالہ میں خصوصی ملاقات ہوئی۔ اخلاق احمد ملک اور پیر امجد حسین نے پی ٹی آئی کویت کی جانب سے وزیر اعظم پاکستان کو یادگاری شیلڈ پیش کی اور وزیر اعظم اور چیف جسٹس آف پاکستان کے ڈیم فنڈ میں دو لاکھ ڈالر کا چیک بھی پیش کیا۔ ملاقات میں اخلاق احمد ملک اور پیر امجد حسین نے کویت میں مقیم پاکستانیوں کے مسائل جن میں خصوصی طور پر کویت کی جانب سے پاکستانیوں کے لئے ویزہ پر پابندی اور پی آئی اے فلائٹس کی بحالی پر تفصیلی بات چیت ہوئی۔ جسے وزیر اعظم پاکستان عمران خان نے بڑے اطمینان سے سنا اور سینیٹر اعظم سواتی اور نعیم الحق کو اس مسئلے کے حل کے لئے خصوصی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ اس مسئلے کو جلد از جلد حل ہونا چاہئیے۔ انہوں نے مزید کہا کہ مستقبل میں قریب میں وہ اعظم سواتی اور نعیم الحق کو اس مسئلے کے حل کے لئے کویت روانہ کریں گے۔ اس کے علاوہ وزیر اعظم پاکستان نے اخلاق احمد ملک اور پیر امجد حسین کو یقین دلایا کہ عنقریب حکومت پاکستان بیرون ممالک مقیم پاکستانیوں کی سہولت کے لئے بہت ساری اسکیمیں متعارف کروائے گی۔ وزیر اعظم پاکستان کے ساتھ اخلاق احمد ملک اور پیر امجد حسین کی ملاقات انتہائی خوشگوار ماحول میں ہوئی۔ جس کے مثبت نتائج جلد کویت میں مقیم پاکستانیوں کو موصول ہوں گے۔اس کے بعد اخلاق احمد ملک اور پیر امجد حسین نے پی ٹی آئی الیکشن آفس اسلام آباد کا بھی دورہ کیا

سیالکوٹ چیمبرز آف کامرس کے نائب صدر ملک نصیر صاحب کو کویت آمد پر خوش آمدید کہتے ہیں ۔ ڈائریکٹر پاکستان بزنس سنٹر کویت حافظ محمد شبیر ۔ پاکستان بزنس سنٹر اور سیالکوٹ چیمبرز آف کامرس کے نائب صدر کے درمیان کویت میں پاکستانی مصنوعات کے فروغ کے لئے مفاہمت۔ حافظ محمد شبیر کا نائب صدر سیالکوٹ چیمبرز آف کامرس ملک نصیر صاحب کےاعزاز میں ظہرانہ کویت کے دورے پر آنے والے سیالکوٹ چیمبرز آف کامرس کے نائب صدر ملک نصیر صاحب نے اتوار کے روز پاکستان بزنس سنٹر کے ڈائریکٹر حافظ محمد شبیر سے تفصیلی ملاقات کی جس کے بعد حافظ محمد شبیر نے ملک نصیر کے اعزاز میں مقامی ہوٹل میں ظہرانہ دیا۔اس موقعہ پر سیالکوٹ چیمبرز آف کامرس اور پاکستان بزنس سنٹر کے درمیان مفاہمت کی ایک یاد داشت (ایم او یو)طے پایا ۔ ایم او یو کے مطابق پاکستان بزنس سنٹر ان کی پراڈکٹس کو کویت میں لانچ کرے گا۔ان کی ایکسپورٹ کوالٹی اسپیشل پراڈکٹس، اور برانڈڈ پراڈکٹس بہترین کوالٹی لانچ کی جائے گی۔ ملک صاحب نے تمام پروڈکٹ کے سیمپلز کا ایک سیٹ مینیجر بزنس سنٹر راجہ ظفر اقبال کو پیش کیا ۔ ملک صاحب کے بزنس پرموشن کے لئے B to B ملاقاتوں کا اہتمام بھی کیا گیا ہے ۔ اس موقعہ پر کویت میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کی ممتاز سماجی شخصیات حسن اسحاق، طارق نذیر ،احتشام اللہ دتہ،ماجد علی چوہدری ممبر بورڈ آف گورنرز اوپی ایف و ڈائریکٹر پاکستان نیشنل انگلش اسکول حولی،افضل شافی اور راجہ ظفر اقبال سینئر منیجر پاکستان بزنس سنٹر بھی موجود تھے۔ سیالکوٹ چیمبرز آف کامرس کے نائب صدر ملک نصیر نے پاکستان کی موجودہ گورنمنٹ کے حوالہ سے کاروباری حالات پر روشنی ڈالتے ہوئے موجودہ حکومت کے فیصلوں کو خوش آئند قرار دیا ۔اور کاروبار میں کیا پراگریس ہوئی ہے انہوں نے تفصیل سے بیان کیا۔سیالکوٹ چیمبرزآف کامرس کویت کی مارکیٹ میں کیا کردار ادا کر سکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ سیالکوٹ کی پراڈکٹس مثلا سرجیکل آلات، سیفٹی آلات' کھیلوں کا سامان وغیرہ کویت کی مارکیٹ میں جگہ بنا چکے ہیں سیالکوٹ چیمبرزآف کامرس پہلے ہی کویت کے دو دورے کر چکا ہے ۔پاکستان بزنس سنٹر کا مقصد ہی کویت میں میڈ ان پاکستان اشیاء کو فروغ دینا ہے۔پاکستان بزنس سنٹر سیلز اور پرچیزمیں ایم کردار ادا کر ریا ہے اور انشاءاللہ کرتا رہے گا۔ حافظ محمد شبیر ڈائریکٹر پاکستان بزنس سنٹر نے ملک نصیر صاحب کو پراڈکٹ رینج اور مارکیٹنگ کے حوالہ سے آگہی فراہم کی۔B to B ملاقاتوں کے حوالہ سے تفصیلی گفتگوہوئی . انہوں نےمارکیٹنگ کے جدید طریقوں کے حوالہ سے مشورے دئیے۔ملک نصیر اعوان نے حافظ محمد شبیر کی کاوشوں کو سراہا انہوں نے کہا کہ حافظ محمد شبیر نے کویت میں میڈ- ان - پاکستان مصنوعات کے فروغ کا بیڑا اٹھایا ہے۔حافظ محمد شبیر نے کہا کہ پاکستان سے کویت کیلئے درآمدات میں اصافہ ہو رہا ہے ۔پاکستان سے درآمدات میں اضافہ کیلئے ہی پاکستان بزنس سنٹر
کاوشیں کر رہا ہے۔ پاکستان کویت اور عالم اسلام کی ترقی و خوشخالی کی دعاوں کے ساتھ یہ تقریب اختتام کو پہنچی۔
 
 
 
پاکستان بزنس سنٹر کویت کے زیر اہتمام یوم دفاع پاکستان کے سلسلہ میں منعقدہ پروگرام کی فقیدالمثال کامیابی کے بعد تمام اسٹیک ہولڈرز سے اظہار تشکر کیلئے5 اکتوبر بروز جمعتہ المبارک الہیتم ریسٹورنٹ فروانیہ میں ایک عشائیہ کا اہتمام کیا گیا ۔تمام میڈیا پارٹنرز کو اس عشائیہ میں شرکت کی دعوت دی گئي ۔اس سلسلہ میں میڈیا کو ایک پریس ریلیز بھی جاری کی گئي ۔
 
 
 
8.png

login with social account

Images of Kids

Events Gallery

Currency Rate

/images/banners/muzainirate.jpg

 

As of Sat, 19 Jan 2019 20:32:19 GMT

1000 PKR = 2.211 KWD
1 KWD = 452.366 PKR

Al Muzaini Exchange Company

Go to top